قبائلی اضلاع میں عارضی طور پر بے گھر افراد کی گھروں کو واپسی کاآخری مرحلہ شروع ہوگیا

اسلام آباد : خیبر پختونخوا کے قبائلی اضلاع میں عارضی طور پر بے گھر ہونے والے افراد کی گھروں کو واپسی کاآخری مرحلہ شروع ہوگیا، اب تک تین لاکھ انتالیس ہزار سات سو ایک خاندان اپنے آبائی علاقوں میں واپس جاچکے ہیں۔ خیبرپختونخواکے ریلیف اور بحالی کے محکمہ کے ترجمان نے ’’اے پی پی‘‘ کو بتایا کہ عارضی طور پر بے گھر افراد کے سولہ ہزار سات سو اسی افراد جن میں سے پندرہ ہزار چھ سو چھیاسٹھ کا تعلق شمالی وزیرستان اور ایک ہزار ایک سو چودہ کا خیبر سے ہے، کی اپنے گھروں کو باعزت واپسی کے حوالے سے کوششیں جاری ہیں۔
انہوں نے کہا کہ شمالی وزیرستان کے عارضی طور پر بے گھر افراد میں ماہانہ نقد امداد کی مد میں بتیس ارب روپے تقسیم کئے گئے اور اس کے علاوہ انہیں ماہانہ راشن بھی فراہم کیا گیا ہے۔ اسی طرح عارضی طور پر بے گھر ہر رجسٹرڈ اورتصدیق شدہ خاندان کے لئے گھروں کو واپسی کے وقت پچیس ہزار روپے نقد کیش گرانٹ اور دس ہزار روپے ٹرانسپورٹ گرانٹ کی مد میں دیئے گئے۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 10 اکتوبر 2019

Share On Whatsapp