سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے مسلم لیگ ن کی ڈیل سے متعلق خبروں کی تردید کر دی

کوئی ڈیل نہیں ہو رہی، نہ میں نے کوئی خط لکھا ہے۔ شاہد خاقان عباسی

اسلام آباد : : سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے حکومت کے ساتھ مسلم لیگ ن کی کسی قسم کی ڈیل ہونے کی خبروں کی تردید کر دی۔ تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی احتساب عدالت میں پیشی سے قبل ایک صحافی نے شاہد خاقان عباسی سے سوال کیا کہ عباسی صاحب خبریں ہیں کہ آپ نے نواز شریف کو ڈیل کے لئے خط لکھا ہے۔ جس کے جواب میں شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ کوئی ڈیل نہیں ہو رہی، نہ میں نے کوئی خط لکھا ہے۔
سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے مزید کہا کہ ہمیں ڈیل کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز خاتون صحافی غریدہ فاروقی نے اپنے کالم میں کہا تھا کہ نواز شریف کے انتہائی قابلِ اعتماد شاہد خاقان عباسی کے ذریعے نواز شریف کو سمجھوتے پر راضی کرنے کے لیے ایک خط تحریر کروایا۔ شاہد خاقان عباسی کو یہ خط تحریر کرنے کا پیغام دینے میں تین اہم ترین لیگی رہنما سرکردہ تھے جن میں سے ایک کا تعلق لاہور سے ہے۔
وہ کئی بار عمران خان کو انتخابات میں شکست بھی دے چکے ہیں۔ دوسرے رہنما کا تعلق سیالکوٹ سے ہے اور تیسری اہم رہنما ایک خاتون تھیں جنہیں بیک وقت مریم نواز اور شہباز شریف دونوں کا اعتماد حاصل ہے۔ شاہد خاقان عباسی چونکہ نواز شریف کے انتہائی قریبی ہیں، نواز شریف نے وزارت عظمیٰ سے نا اہلی کے بعد خود ان کا نام اگلے وزیر اعظم کے طور پر منتخب کیا، دھیمے مزاج کے مفاہمانہ طبیعت رکھنے والے شاہد خاقان عباسی کو پیغام رسانی کے لیے اسی لیے منتخب کیا گیا کہ نواز شریف کے ساتھ ساتھ مریم نواز بھی اعتماد اور اعتبار کر سکیں۔
ایک خبر یہ بھی ہے کہ اس بار کے ڈیل پیکیج میں شہباز شریف کے ساتھ شاہد خاقان عباسی کا نام بھی شامل ہے کہ شاید کسی اہم ذمہ داری کے لیے قرعہ فال ان کے نام کا بھی نکل سکتا ہے۔ شاہد خاقان عباسی کے ذریعے پیغام رسانی کر کے نواز شریف کو یہ بھی پیغام پہنچایا گیا کہ اس بار صرف شہباز شریف ہی نہیں بلکہ پارٹی کے دیگر رہنما بھی ڈیل، سمجھوتے یا بات چیت کے حامی ہیں۔ تاہم شاہد خاقان عباسی نے ان تمام خبروں کی تردید کر دی ہے۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 12 ستمبر 2019

Share On Whatsapp