جرمنی کے شہر برلن میں موجود پاکستانی سفارتخانے میں یوم آزادی اور پرچم کُشائی کی تقریب

تقریب میں شریک پاکستانی کمیونٹی نے کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی بھی کیا

برلن : : پاکستان اور دنیا کے دیگر ممالک کی طرح جرمنی کے شہر برلن میں موجود پاکستانی سفارتخانے میں بھی آج پرچم کشائ کی سادہ سی تقریب کا انعقاد کیا گیا۔جس میں یہاں مقیم پاکستانی کمیونٹی نے یوم آزادی پاکستان کے موقع کو مقبوضہ جموں وکشمیر کے ساتھ اظہار یکجہتی کے طور پر بھی منایا۔ برلن سے مہوش خان کی رپورٹ برلن کے پاکستانی سفارتخانے میں میں آج ہونے والی اس تقریب میں برلن میں مقیم پاکستانی کمیونٹی، سفارت خانہ کے افسران، عملہ اور ان کے اہلخانہ اور صحافیوں نے شرکت کی۔
یوم پاکستان کے موقع پر مقبوضہ جموں و کشمیر کے عوام کے ساتھ یکجہتی کے سلسلے میں صدر پاکستان اور وزیراعظم پاکستان کے پیغامات پڑھ کر سنائے گئے۔جن میں اپنے کشمیری بہن بھائیوں کا ساتھ دینے کا بھی عہد کیا گیا۔ تقریب میں سفیر پاکستان جوہر سلیم نے اپنے خیالات کا بھی اظہار کیا اور نہ صرف کشمیر میں بھارتی جارحیت کے متعلق بات کی بلکہ ہندوستان میں مسلمانوں کے ساتھ روا رکھا جانے والے امتیازی سلوک سے متلعق بھی بات کی اور آزادی کتنی بڑی نعمت ہے اس کو باور کرایا۔
بھارت کا مقبوضہ جموں و کشمیر میں ان کی آزادی کی جنگ کو قوت کے زور ہر کچلنا انتہائ ناقابل قبول ہے۔اسی کے ساتھ سفیر جوہر سلیم کا کہنا تھا کہ ایک ایسے موقع پر کہ جب پاکستانی وزیر اعظم عمران خان امریکہ کے دورے پرامریکہ کے صدر ٹرمپ سے مل کر آئے اور ٹرمپ کے اس بیان کے بعد کہ امریکہ کشمیر کے معاملے میں ثالثی کا کردار ادا کرسکتا ہے۔کیا ثابت کرتا ہے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سفیر جوہر سلیم کا کہنا تھا کہ۔
یہاں ہم نے جو چودہ اگست کی تقریب منعقد کی ہے۔اس میں ہم نے خاص کر جموں وکشمیر میں بھارتی جارحیت کو ہائ لائٹ کیا ہے ۔تاکہ مہذب دنیا میں بھی اس مسلے کو بہتر طور پر اجاگر کیا جاسکے۔ سفیر جوہر سلیم نے اس بات کا بھی اعادہ کیا کہ پاکستان اور اس کی عوام مقبوضہ کشمیر کے مظلوم عوام کے ساتھ کندھا سے کندھا ملا کر کھڑی ہے اور پاکستان مقبوضہ کشمیرکے مظلوم عوام کے ساتھ سفارتی، سیاسی اور اخلاقی مدد جاری رکھے گا۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ۔ قوم کےہر طبقے کے افراد کو ذاتی مفادات سے بالاتر ہوکر کام کرنا چاہئے تاکہ ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہوسکے۔ تقریب میں پاکستانی نوجوانوں نے بھی پاکستان زندہ باد کے نعرے لگائے اور کشمیر بنے گا پاکستان کے۔

تاریخ اشاعت : بدھ 14 اگست 2019

Share On Whatsapp