Australian Man Dies After Allegedly Swallowing A Gecko As A Party Dare

پارٹی چیلنج میں چھپکلی کھانے والا شخص اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھا

برسبین، آسٹریلیا سے تعلق رکھنے والے 34 سالہ ڈیوڈ ڈویل نے  پارٹی میں اپنی ہمت دکھانے کے لیے چھوٹی  گھریلو چھپکلی ، گیکو، کو کھانے کا مظاہر ہ کیا لیکن اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔
ڈیوڈ کو 3 دسمبر 2018 کو  برسبین کے میٹر ہوسپیٹل لایا گیا تھا۔ ان کے دوستوں نے بتایا کہ انہوں نے تین دن پہلے ڈیوڈ کو ایک پارٹی میں چھپکلی کھاتے دیکھا تھا۔ڈیوڈ نے چھپکلی کھانے  کی بات اپنی پارٹنر  الیرا کو بھی نہیں بتائی تھی۔

اس لیے کسی کو بھی معلوم نہیں تھا کہ  ڈیوڈ نے ایسا کیا کھا لیا، جس کی وجہ سے وہ  ہسپتال میں موت سے لڑ رہے ہیں۔
ڈاکٹر تو ڈیوڈ کی بیماری کو کچھ اور سمجھے تھے لیکن وہ در حقیقت سالمونیلا سے متاثر تھے۔ سالمونیلا جرثومہ جس کے ذریعے سوء ہضم، انتڑیوں کی سوزش یا آلاتِ تناسل کی بیماریاں، انسان اور دوسرے گرم خون رکھنے والے جانوروں کو لگ جاتی ہیں  اور کچھ کیسز میں مریض کی موت بھی واقع ہو جاتی ہے۔

کوئی نہیں جانتا تھا کہ ڈیوڈ کو  اس بیماری کا بیکٹریا کیسے لگا۔ لیکن  جب ایک دوست نے   بتایا کہ ڈیوڈ نے گیکو کو کھایا تھا تو  اس بیماری کا معمہ بھی حل ہوگیا۔ الیرا نے بتایا کہ وہ تو سمجھی تھی کہ ڈیوڈ نے چھپکلی کو  کھانے کی بجائے پھینک دیا تھا۔ تاہم جب  الیرا نے ڈاکٹروں کو  ڈیوڈ کے چھپکلی کھانے کے بارے میں بتایا تو ڈاکٹروں کو فوراً پتا چل گیا کہ وہ  سالمونیلا سے متاثر ہوا ہے۔
ڈیوڈ کی حالت کافی خراب ہو چکی تھی۔ ان کے منہ سے سبز جھاگ بہنے لگا، ان کا پیشاب سیاہ ہوگیا اور پیٹ بھی بہت پھول گیا۔ڈیوڈ اتنی تکلیف میں تھے کہ ڈاکٹروں نے انہیں  مصنوعی کوما  میں منتقل کر دیا۔
چھپکلی کھانے کے دو ہفتے بعد سرجری کے دوران ڈیوڈ کی موت واقع ہوگئی۔ڈیوڈ کی وفات کے بعد اُن کے خاندان والوں نے عوام میں  آگاہی دینے کے لیے سب کو ڈیوڈ کی کہانی  بتانا شروع کر دی۔

تاریخ اشاعت : بدھ 3 جولائی 2019

Share On Whatsapp
سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں