ڈالر کی قیمت آسمان پر پہنچ جانے کی وجہ سے ملکی معیشت برباد ہو چکی ہے

قومی اسمبلی کے اجلاس میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کا بجٹ پر بحث کا آغاز کرتے ہوئے اظہار خیال، , شور شرابے کی وجہ سے مکمل خطاب کا موقع نہ مل سکا

اسلام آباد : قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کو بجٹ 2019-20ء پر حکومتی اور اپوزیشن ارکان کے درمیان جملے بازی اور شور شرابے کی وجہ سے خطاب کا موقع نہ مل سکا تاہم ڈپٹی سپیکر کے بار بار کہنے کے باوجود وہ صرف اتنا کہہ سکے کہ وفاقی بجٹ نے موجودہ حکومت کی کارکردگی کا پول کھول دیا ہے‘ ڈالر کی قیمت آسمان پر پہنچ جانے کی وجہ سے ملکی معیشت برباد ہو چکی ہے۔
جمعہ کو قومی اسمبلی کے اجلاس میں قائد حزب اختلاف محمد شہباز شریف نے وفاقی بجٹ 2019-20ء پر بحث کا آغاز کرتے ہوئے رواں سال کے دوران حکومت نے دو ’’منی ‘‘ بجٹ پیش کئے جس کی وجہ سے پاکستان کی معیشت تباہی کا شکار ہوگئی ہے۔ شہباز شریف نے کہا کہ بجٹ نے حکومت کی کارکردگی کا پول کھول دیا ہے۔ یہ بے بنیاد الزامات لگا تے رہے۔ ان کی دس ماہ کی کارکردگی نے غریب آدمی کے منہ سے نوالہ چھین لیا۔ ڈالر کی قدر کو آسمان پر پہنچا دیا۔ ملکی معیشت تباہی کا شکار ہوئی۔ مزدور کو دو وقت کی روٹی بھی میسر نہیں رہی۔ ان کی کارکردگی کو کوئی بھی عوام سے چھپا نہیں سکتا۔ ’’سچائی چھپ نہیں سکتی بناوٹ کے اصولوں سے اور خوشبو آ نہیں سکتی کبھی کاغذ کے پھولوں سے‘‘

تاریخ اشاعت : جمعہ 14 جون 2019

Share On Whatsapp