ایف آئی اے حکام کا ایف آئی اے دفتر پر چھاپہ

جعلی دفتر میں موجود افراد کا ایف آئی اے اہلکاروں پر تششدد، فائرنگ کر کہ فرار

کراچی  : :ایف آئی اے حکام نے ایف آئی اے دفتر پر چھاپہ مارا۔
جعلی دفتر میں موجود افراد کا ایف آئی اے اہلکاروں پر تششدد، فائرنگ کر کہ فرارہو گئے۔ تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے سولجر بازار میں ایف آئی اے کے جعلی دفتر پر سائبر کرائم سرکل نے چھاپہ مارا تو مسلح افراد نے اہلکاروں پرحملہ کر دیا۔ جعلی ایف آئی اے اہلکاروں نے باڈی بلڈنگ کلب سے درجنوں افراد کو بلا کرایف آئی اے کی ٹیم پرتششد کیاگیا۔
بازار میں ایف آئی کے جعلی دفتر میں موجود جعلی اہلکار فائرنگ کرتے ہوئے فرار ہو نے میں کامیاب ہو گئے۔ سی سی ٹی وی فوٹیج نے ایف آئی اے کے جعلی دفتر کا بھانڈا پھوڑ دیاتھا۔ ایف آئی اے حکام کے مطابق ٹارچر سیل میں تشدد کرنے والے 2 افراد کی شناخت ہوچکی ہے، تشدد میں ملوث افراد کی شناخت دانش جینیا اور جبران کے ناموں سے ہوئی ہے۔ واقعے کا مقدمہ انسداد دہشت گردی، مقابلہ، اقدام قتل، بھتہ خوری اور دیگر سنگین جرائم کی دفعات کے تحت درج ہو چکا ہےذرائع کے مطابق جعلی اہلکاروں کے خلاف مقدمہ نبی بخش تھانے میں درج کیا گیا ہے۔
دانش اور جبران کے ناموں کو ای سی ایل میں شامل کرنے کیلئے درخواست دے دی گئی ہے۔ذرائع کے مطابق ٹارچر سیل میں جن شہریوں کی برہنہ ویڈیوز بنائی گئی تھیں وہ بھی ایف آئی اے کے دفتر پہنچ گئے جبکہ واقعے کا مقدمہ ایف آئی اے سائبر کرائم سرکل میں بھی درج کیا جا چکا ہے۔ ایڈیشنل آئی جی کراچی نے ملزمان کی گرفتاری کے لیے 3 افسران پر مشتمل تحقیقاتی کمیٹی قائم کر دی ہے تاکہ ملزمان کو جلد از جلد انکے انجام تک پہنچایا جا سکے۔

تاریخ اشاعت : منگل 10 دسمبر 2019

Share On Whatsapp