کاروباری پابندیوں کے خاتمے کے لئے ہواوے کی امریکی اپیل کورٹ سے درخواست

شنزن : چینی ٹیلی کام کمپنی ہواوے نے امریکی اپیل کورٹ سے درخواست کی ہے کہ وہ ان پر عائد کاروباری پابندی کو ختم کرنے کے احکامات صادر کریجن کے تحت امریکی کیریئرز کو کمپنی کے سامان کی خریداری کے لئے 8.5 بلین ڈالر کے وفاقی فنڈ کو استعمال کرنے سے روک دیا گیا ہے۔ہواوے نے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ قومی سلامتی کی بنیاد پر ان پر اور ان کے چینی حریف زیڈ ٹی ای پرگزشتہ ماہ عائد کی جانے والی پابندی یہٰ ثابت کرنے میں ناکام رہی ہے کہ ہم امریکی مفاد کے لئے ایک خطرہ تھے اور ان کی کاروباری طرز عمل خلاف ورزی اور غیر قانونی تھے۔
ہواوے کے چیف لیگل آفیسرسونگ لیوپنگ نے شنزن میں ہونے والی پریس کانفرنس میں کہا کہ ہوواے چین کی کمپنی ہے بس اس کو نشانہ بنانے کی یہی ایک وجہ ہے۔ہواوے کے خلاف امریکی مہم اس خدشے سے شروع ہوئی کہ ہواوے کے سی ای او رین زینگفی ہیں جو چینی فوج کے سابق انجینئررہ چکے ہیں اسی وجہ سے ہواوے کو امکانی سیکیورٹی خطرہ قرار دیا گیا۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 5 دسمبر 2019

Share On Whatsapp