ایڈز پر قابو پانے کے لئے ایکشن پلان کا اعلان جلدکردیا جائے گا

وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے نیشنل ہیلتھ سروسز ریگولیشنز اینڈ کوارڈینیشن ڈاکٹر ظفر مرزا کا واک کے شرکاء سے خطاب

اسلام آباد : وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے نیشنل ہیلتھ سروسز ریگولیشنز اینڈ کوارڈینیشن ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا ہے کہ حکومت نے ملک میں ایڈز کی لعنت پر قابو پانے کے لئے قومی ایکشن پلان تیار کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پیر کو عالمی ادارہ صحت کے زیر اہتمام ایڈز سے متعلق آگاہی کی واک کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا کہ ایکشن پلان کا جلد اعلان کردیا جائے گا جو بیماری کی روک تھام کے لئے صوبوں کے تعاون سے تیار کیا جارہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ حکومت اس بیماری کی روک تھام کے لئے مکمل پر عزم ہے اور اس حوالے سے موجودہ استعمال ہونے والی قابل تلف سرنجز پر مکمل پابندی سمیت متعدد اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انتقال خون کے ذریعے بیماری کے پھیلائو کی روک تھام کے لئے کوششیں بروئے کار لائی جارہی ہیں جو خون کے مکمل تجزیئے کی پالیسی پر عملدرآمد سے ہی ممکن ہے تاکہ دیگر طبی پیچیدگیوں سے بچا جا سکے۔
اس حوالے سے ایک ٹاسک فورس تشکیل دی گئی ہے جو اس منصوبے پر مؤثر طور پر کام کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی پاکستان (ڈریپ) محفوظ ٹیکہ جات کے حوالے سے ضابطہ اخلاق متعارف کرائے گی۔ انہوں نے کہا کہ لاڑکانہ میں ایڈز کے پھیلنے کی وجوہات کے پیچھے غیر محفوظ سرنجوں کا استعمال کارفرما تھا۔ ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا کہ آئندہ برس جون سے صرف خود کار طریقے سے تلف ہوجانے والے سرنجز کا استعمال کیا جائے گا جو ایک دفعہ استعمال کے بعد خود بخود بے کار ہو جائیں گی۔
انہوں نے عوام پر زور دیا کہ ایچ آئی وی ایڈز سے بچائو کے لئے احتیاطی تدابیر اختیار کریں تاکہ اسے مزید پھیلنے سے روکاجا سکے۔ واک کا اہتمام این آئی ایچ میں کیا گیا جس میں زندگی کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد، سول سوسائٹی کے اراکین اور ماہرین صحت کی کثیر تعداد کے علاوہ پیرامیڈیکل اور نیم پیرامیڈیکل عملہ نے بھی شرکت کی۔ شرکاء نے ایچ آئی وی ایڈز سے بچائو کے متعلق آگاہی کے بینرز اٹھا رکھے تھے۔

تاریخ اشاعت : پیر 2 دسمبر 2019

Share On Whatsapp