Policewoman Helps Deliver Baby Boy In Cab. He Is Named After Her

ٹیکسی میں بچے کی پیدائش میں مدد کرنے پر والدین نے بچے کا نام خاتون پولیس افسر کے نام پر رکھ دیا

ایک نوزائیدہ بچے کے والدین نے اس کا نام ایک خاتون پولیس افسر کے نام پر رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس خاتون پولیس افسر نے ٹیکسی میں دوران سفر اس کی پیدائش میں مدد کی تھی۔

لانس کارپورل کوماتھی نارائن  کی ڈیوٹی کوالالمپور، ملایشیا کے ٹرمنینل بیرسیپادو سیلاٹن میں لگی تھی۔ڈیوٹی کے دوران ایک انڈونیشین  حاملہ خاتون اُن کے پاس آئیں۔ خاتون نے ہسپتال جانے کے لیے کوماتھی سے مدد مانگی۔

خاتون کی سنجیدہ حالت دیکھ کر  کوماتھی نے فوراً ایک ٹیکسی روکی، ٹیکسی میں موجود مسافر کو صورتحال بتائی تو  وہ مسافر نیچے اتر گیا۔ کوماتھی نے خاتون کو ٹیکسی میں بٹھایا اور پھر اُن کے ساتھ ہی ہسپتال میں جانے کا فیصلہ کیا۔ خاتون ابھی ہسپتال پہنچی بھی نہیں تھی کہ  ٹیکسی میں ہی اُن کےہاں بیٹے کی پیدائش ہوگئی۔ خوش قسمتی سے اُن کی معاونت کے لیے کوماتھی وہاں پر موجود تھی۔

یہ واقعہ 7 اکتوبر کو پیش آیا۔ سوشل میڈیا پر  27 سالہ کوماتھی کی ہسپتال میں نوزائیدہ بچے اور خاتون کے ساتھ لی گئی تصویر کافی وائرل ہو گئی ہے۔ بچے کے والدین نے اس کا نام رزقی ساردی ماتھی-ورنا رکھا ہے۔ 

اخبار دی سن ڈیلی کے مطابق لانس کارپول کوماتھی نارائن اور ٹیکسی ڈرائیور وونگ کوک کو محکمہ پولیس کی طرف سے تعریفی  سرٹیفیکیٹس سے نوازا گیا ہے۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 24 اکتوبر 2019

Share On Whatsapp
سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں