نواز شریف کے مرض کی تشخیص کر لی گئی

نواز شریف کو تھرموسائیٹوپینیا ہے، اس بیماری میں پلیٹ لیٹس کم ہو جاتے ہیں اور قوتِ مدافعت کم ہو جاتی ہے۔ڈاکٹر طاہر شمسی نے بیماری کی تشخیص کرلی

لاہور : وزیراعظم عمران خان کی خصوصی ہدایت پر کراچی سے لاہور آنے والے ڈاکٹر طاہر شمسی نے نواز شریف کیبیماری کی تشخیص کرلی ہے۔ ذرائع کے مطابق ڈاکٹر طاہر شمسی کوآغا خان ہسپتال کراچی سے نواز شریف کے علاج کیلئے لاہور لایا گیا ہے۔ انہوں نے سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی رپورٹس کا جائزہ لینے کے بعد ان کے مرض کی تشخیص کرلی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ نواز شریف کو تھرموسائیٹوپینیا ہے، اس بیماری میں پلیٹ لیٹس کم ہو جاتے ہیں اور قوتِ مدافعت کم ہو جاتی ہے۔
خیال رہے کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف منگل اور بدھ کی درمیانی شب نیب لاہور سے سروسز ہسپتال آئے تھے جہاں ان کا علاج جاری ہے۔ میڈیکل بورڈ کی جانب سے سابق وزیر اعظم کو بار بار پلیٹ لیٹس کی کٹس لگائی گئیں لیکن ان کے سفید خلیے بار بار کم ہوتے جارہے ہیں جس کی وجہ سے ڈاکٹرز بھی پریشانی کا شکار تھے اور ان سے مرض کی تشخیص نہیں ہوپارہی تھی تاہم اب نواز شریف کی بیماری کی تشخیص کر لی گئی ہے۔ ڈاکٹر طاہر شمسی پاکستان میں بون میرو ٹرانسپلانٹ کے واحد ماہر ڈاکٹر ہیں۔ حکومت نے وائی ڈی اے چلڈرن ہسپتال کے صدر ڈاکٹر ناصر بخاری کو بون میرو ٹرانسپلانٹ کی ٹریننگ دی تھی لیکن وہ بھی اس پائے کے ڈاکٹر نہیں ہیں۔ اب ڈاکٹر طاہر شمسی نے نواز شریف کا علاج شروع کر دیا ہے۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 24 اکتوبر 2019

Share On Whatsapp