اومنی گروپ کی درخواست، ایف آئی اے سے جواب طلب،سماعت غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی

کراچی : سندھ ہائی کورٹ میں اومنی گروپ کی ایف آئی اے تحقیقات اور ہراساں کرنے کے خلاف درخواست کی سماعت میں عدالت نے ایف آئی اے کو جواب جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے سماعت غیر معینہ مدت کے لیے ملتوی کر دی۔اومنی گروپ کے سربراہ انور مجید کی ایف آئی اے کے خلاف درخواست کی سماعت میں ایف آئی اے حکام نے تحریری جواب جمع کرانے کے لیے مہلت طلب کرلی۔
دورانِ سماعت ایف آئی اے کے وکیل کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ متعلقہ حکام سے پوچھ کر بتا سکتے ہیں کہ مزید تحقیقات جاری ہیں یا نہیں۔ایف آئی اے کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ میگا منی لانڈرنگ کیس ایف آئی اے نے شروع کیا تاہم اب یہ نیب کو منتقل ہو چکا ہے۔عدالت نے ایف آئی اے سے رپورٹ طلب کرتے ہوئے سماعت غیر معینہ مدت تک ملتوی کر دی۔انور مجید کی جانب سے دائر درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ ایف آئی اے سے پوچھا جائے کہ کتنی انکوائریز چلائی جا رہی ہیں اور ایف آئی اے انکوائری کے نام پر ہراساں کر رہی ہے۔انور مجید کی جانب سے درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ ایف آئی اے کو ہراساں کرنے اور انتقامی کارروائی سے روکا جائے۔

تاریخ اشاعت : بدھ 23 اکتوبر 2019

Share On Whatsapp