Passenger Wears 2.5 Kg Of Clothes To Avoid Paying Excess Baggage Fee

.اضافی وزن کی ادائیگی سے بچنے کے لیے خاتون مسافر نے ڈھائی کلو وزن کے کپڑے پہن لیے۔

ایک ائیر لائن کی مسافر کو جب بتایا کہ اُن کا سامان سات کلو گرام کی مقررہ حد سے ڈھائی کلو زیادہ ہے ، جس کے لیے اضافی فیس ادا کرنی پڑے گی تو خاتون نے اس اضافی فیس کو بچانے کے لیےانوکھا طریقہ اپنایا۔ انہوں نے اپنے سامان میں سے تقریبا ڈھائی کلوگرام وز ن کے کپڑے نکالے اور انہیں اپنے موجودہ کپڑوں کے اوپر ہی پہن لیا۔ اس طرح انہوں نے اپنے سامان کا وزن مقررہ حد کے مطابق کر دیا۔
فلپائن سے تعلق رکھنے والی جیل روڈریگویز نے 2 اکتوبر کو ایک فیس بک پوسٹ میں بتایا کہ ائیرلائن کے عملے نے انہیں سامان کے وزن کے بارے میں مطلع کرتے ہوئے بتایا تھا کہ انہیں اضافی وزن کے اضافی پیسے ادا کرنے ہونگے۔ مس روڈریگوئز نے اضافی رقم ادا کرنے سے انکار کر دیا۔ اس کے بجائے انہوں نے وہ طریقہ اپنایا، جو اس سے پہلے بھی بہت سے لوگ کامیابی سے اپنا چکے ہیں۔
انہوں نے اپنے جسم پر ڈھائی کلو گرام وزن کے مزید کپڑے پہن لیے۔ انہوں نے فیس بک پر اپنی تصاویر بھی شیئر کیں۔ ان تصاویر میں انہیں تقریباً 5 پینٹیں ، کئی ٹی شرٹ اور کئی جیکٹیں پہنا دکھایا گیا ہے۔فیس بک پر اُن کی تصویر ہزاروں بار شیئر ہوئی ہیں۔ بہت سے لوگوں نے ان تصویروں پر دلچسپ تبصرے کیے ہیں۔ اس سال جولائی میں سکاٹ لینڈ سے تعلق رکھنے والے ایک شخص نے بھی 15 ٹی شرٹس پہن کر اضافی وزن کی اضافی فیس بچائی تھی، جس کی تصاویر کافی وائرل ہوئی تھیں۔

تاریخ اشاعت : پیر 21 اکتوبر 2019

Passenger Wears 2.5 Kg Of Clothes To Avoid Paying Excess Baggage Fee
Share On Whatsapp
سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں