Man Claims To Be Oldest Person To Have Ever Lived, Sparks Controversy

بھارتی شخص کے انسانی تاریخ کے عمر رسیدہ ترین شخص ہونے کے دعوے نے نیا تنازعہ کھڑا کر دیا

حال ہی میں ایک بھارتی شخص نے  ابو ظہبی ائیر پورٹ پر حکام کو حیران کر دیا ہے۔ اس شخص کے پاسپورٹ پر  سال پیدائش 1896 درج  ہے۔ یعنی یہ شخص اس وقت 123 سال  کا ہے۔  اس حساب سے دیکھا جائے  تو یہ  تاریخ کی عمر رسیدہ ترین خاتون  فرانس کی جینی لوئی کالمنٹ سے بھی  بڑا ہے۔ گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کے  مطابق 122 سالہ جینی معلوم انسانی تاریخ کی تصدیق شدہ   عمررسیدہ  ترین خاتون   تھیں۔


سوامی  سیوانندا کے  پاسپورٹ کے مطابق وہ جینی سے بھی بڑے ہیں۔ سوامی سیوانندا کے لیے اصل مسئلہ یہ ہے کہ اُن کے پاس عمر کے ثبوت کےلیے مندر کا ایک پرانا رجسٹر ہی ہے۔ اس کے علاوہ سوامی سیوانندا اپنی عمر سے کئی دہائی  چھوٹے نظر آتے ہیں۔تاہم وہ اپنی ظاہری شخصیت اور صحت کی وجہ  سادہ  اور متوازن زندگی کو بتاتے ہیں۔ وہ  یوگا کرتے ہیں  ، بغیر مسالوں  کی غذاکھاتے ہیں اور محتاط زندگی گزارتے ہیں۔
سوامی سیوانندا  کوششیں کر رہے ہیں کہ   اُن کا نام  گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں شامل کیا جائے لیکن  اپنی عمر کے حوالے سے اُن کے پاس شواہد کی کافی کمی ہے۔
سوامی سیوانندا مبینہ طور پر 8 اگست 1896 کو بیہالا میں پیدا ہوئے۔ بیہالا اس وقت ایک گاؤں تھا۔ سوامی سیوانندا کا کہنا ہے کہ  وہ صرف چار سال کے تھے، جب اُن کے والدین دونوں ہی وفات پا گئے۔
اس کے بعد اُن کی بہن  انکے ساتھ کھانا مانگا کرتی تھی لیکن دو سال بعد اُن کی  بہن  بھی وفات پا گئی۔اس کے بعد اُن کے رشتے داروں نے  انہیں ایک گرو کے حوالے کر دیا۔یہ گرو انہیں  نودویپ شہر لے آیا۔ بعد میں سوامی سیوانندا   ، وارانسی شہر میں رہنے لگے۔ وہاں وہ سوامی بن گئے اور انہیں کئی چیلے بھی مل گئے۔
سوامی سیوانندا  کا کہنا ہے کہ وہ شہرت نہیں چاہتے تھے،  انہیں اُن کے چیلوں نے ہی سامنے آنے اور گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں اپنا نام درج  کرانے پر قائل کیا ہے۔

بدقسمتی سے دوسرے بھارتیوں کی طرح، جو سوامی سیوانندا سے بھی زیادہ عمر کا ہونے کا دعویٰ کرتے ہیں، اُن کے پاس بھی پیدائش کے اندراج کے لیے  صرف مندر کا رجسٹر ہے۔
زندہ افراد میں عمر رسیدہ ترین شخصیت کا اعزاز جاپان کی 116 سالہ خاتون کین تاناکا کے پاس ہے۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 10 اکتوبر 2019

Man Claims To Be Oldest Person To Have Ever Lived, Sparks Controversy
Share On Whatsapp
سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں