70 سے زائد چینلز پر منفی خبریں اور تبصرے جاری رکھیں گے تومایوسی ہی پیدا ہوگی. فردوس عاشق اعوان

حکومت آزادی اظہار پر یقین رکھتی ہے مگر اس کی آڑمیں قومی مفادات کو ٹھیس پہنچانے کی اجازت نہیں دی جاسکتی. معاون خصوصی کا تقریب سے خطاب

اسلام آباد(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔10 اکتوبر ۔2019ء) وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ میڈیا حکومت پر مثبت تنقید اور بہتر تجاویز دینے کا حق رکھتا ہے لیکن ساتھ ہی میڈیا کو خیال رکھنا پڑے گا کہ کہیں وہ قومی مفاد سے تصادم تو نہیں کررہا. اسلام آباد میں ”21 ویں صدی اور میڈیا سافٹ پاور“کے عنوان سے منعقدہ کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت پر تنقید مثبت رویہ ہے لیکن اس کی آڑ میں قومی مفاد کو ٹھیس نہ پہنچائی جائے‘انہوں نے کہا کہ میڈیا کے کردار کو ایک ذمہ درانہ فرائض میں تبدیل کرنے کی ضرورت ہے.
فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ پاکستان میں 70 سے زائد چینلز پر منفی خبریں اور تبصرے جاری رکھیں گے تو بیرون ملک میں بیٹھے پاکستانیوں کے لیے مایوسی بڑھے گی اور ملکی معیشت پر بھی منفی اثرات مرتب ہوں گے. انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جان بوجھ کر قانون کو یرغمال بنایا گیا اور آئین میں مرضی کی تبدیلی لا کر کمزور کیا، اپ ملک میں ادارے افراد کے ماتحت نہیں بلکہ افراد اداروں کے ماتحت اور تابے ہوں گے.
وزیراعظم کی معاون خصوصی نے کہا حکومت میڈیا کو ریاست کا چوتھا ستون تصور کرتی ہے کیونکہ میڈیا نظریاتی سرحدوں کے امین کا کردار ادا کرتا ہے انہوں نے کہاکہ وزیراعظم عمران خان کی جنرل اسمبلی میں تقریر نے دنیا میں بھونچال برپا کردیا. فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے اسلام کا حقیقی چہرہ دنیا کے سامنے پیش کیا انہوں نے کہا کہ اب دنیا کو پیغام دینا ہے کہ پاکستان میں ادارے آزاد اور بااختیار ہیں.
فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ قوم وزیر اعظم کی قیادت میں چٹان بن کر کھڑی ہے ‘ سافٹ پاور میڈیا کلیدی حیثیت اختیار کر چکا ہے، سوشل میڈیا سے پیغام چند لمحوں میں دنیا تک پہنچایا جا سکتا ہے. انہوں نے کہاکہ وزیر اعظم کے خطاب نے انٹرنیشنل کمیونٹی کو جھنجھوڑا، وزیر اعظم نے مسئلہ کشمیر پر موثر انداز سے دنیا کو آگاہی دی‘انہوں نے کہا کہ میڈیا حکومت کی رہنمائی میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے، عالمی طاقتیں ہمیشہ اپنے مفادات کو مد نظر رکھتی ہیں حکومت پر تنقید کرنا اور صحیح راستہ دکھانا میڈیا کا اچھا اقدام ہے میڈیا کا حق ہے کہ وہ حکومت کی اصلاح کرے.
انہوں نے کہا کہ میڈیا کو خیال رکھنا ہے کہیں ملکی مفاد کے خلاف تو کچھ نہیں ہو رہا، پاکستانی قوم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ لڑی۔ قوم وزیر اعظم کی قیادت میں چٹان بن کر کھڑی ہے. انہوں نے کہا کہ دنیا کی نظریں پاکستانی عوام کی طرف ہیں، اس ملک میں ادارے لوگوں کے تابع نہیں ہوں گے، لوگ اب ادارے کے تابع ہوں گے پاکستان میں رہنے والا بچہ بچہ کشمیریوں کی آواز ہے، کشمیر بنے گا پاکستان کی تکمیل تک دنیا کو پیغام دیتے رہیں گے.

تاریخ اشاعت : جمعرات 10 اکتوبر 2019

Share On Whatsapp