سعودی وزیرتوانائی عہدے سے برطرف ، شہزادہ عبدالعزیز نئے وزیر مقرر

وزیر توانائی و صنعتی وسائل کے نائب انجینئر عبدالعزیز بن عبداللہ کو بھی ان کے عہدے سے ہٹا دیا گیا،شاہی فرمان جاری

ریاض : سعودی عرب میں ایک شاہی فرمان کے ذریعے وزیر توانائی خالد الفالح کو ان کے منصب سے ہٹا دیا گیا ہے۔ ان کی جگہ شہزادہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کو توانائی کا نیا وزیر مقرر کیا گیا ہے۔عرب ٹی وی کے مطابق اس کے علاوہ شاہی فرمان میں وزیر توانائی و صنعتی وسائل کے نائب انجینئر عبدالعزیز بن عبداللہ کو بھی ان کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔ ان کی جگہ انجینئر اسامہ بن عبدالعزیز الزامل کو مذکورہ منصب دیا گیا ہے۔
اسی طرح شاہی فرمان کے ذریعے شہزادہ سلطان بن احمد بن عبدالعزیز آل سعود کو بحرین میں سعودی عرب کا نیا سفیر مقرر کیا گیا ہے۔ سعودی پریس ایجنسی کے مطابق خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے وزیر توانائی خالد الفلیح کو برطرف کرکے ان کی جگہ اپنے بیٹے عبدالعزیز بن سلمان کو تعینات کیا ہے۔یاد رہے کہ سعودی عرب کی معیشت خام تیل کے گرتے نرخوں کے باعث مالی مسائل کا شکار ہے اور وہ قومی آئل اینڈ گیس کمپنی آرامکو کے حصص پرائیویٹ سرمایہ کاروں کو فروخت کرنا چاہتی ہے ، ایسے دورانیے میں وزیر توانائی کی تبدیلی بڑا فیصلہ ہے۔

تاریخ اشاعت : اتوار 8 ستمبر 2019

Share On Whatsapp