صوبائی وزیر صحت کاپنجاب بھر کے سرکاری و نجی ہسپتالوں کے فضلا کو تلف کرنے کیلئے نئی سنٹرل پالیسی بنانے کا حکم

ہسپتالوں کے فضلا کی مارکیٹ میں فروخت کی مکمل تحقیقات کرکے ذمہ داران کے خلاف کارروائی کی جائے گی‘صوبائی وزیر ڈاکٹر یاسمین راشد

لاہور : صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشدنے پنجاب بھر کے سرکاری و نجی ہسپتالوں کے فضلا کو تلف کرنے کیلئے نئی سنٹرل پالیسی بنانے کا حکم دے دیا۔ڈاکٹر یاسمین راشدکی زیرصدارت محکمہ سپیشلائیزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن میں اعلی سطحی اجلاس ہوا جس میں صوبائی سیکرٹری سپیشلائیزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن مومن آغا، سپیشل سیکرٹری میاں شکیل اور ایم ڈی لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی اجمل بھٹی ،ایم ایس پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی ڈاکٹر امیر، ایم ایس جناح ہسپتال ڈاکٹر افتخار، ایم ایس گنگارام ہسپتال ڈاکٹر فیاض بٹ، ایم ایس جنرل ہسپتال ڈاکٹر محمود صلاح الدین،ایم ایس میوہسپتال طاہر خلیل و دیگر ہسپتالوں کے ایم ایس حضرات کے علاوہ افسران نے شرکت کی۔
اجلاس میں لاہور سمیت صوبہ بھر کے سرکاری و نجی ہسپتالوں سے فضلا کو تلف کرنے کے حوالے سے سنٹرل پالیسی پر تبادلہ خیال کیاگیا۔ایم ڈی لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی اجمل بھٹی نے لاہور کے سرکاری ہسپتالوں سے فضلا کو تلف کرنے کے مختلف طریقہ کار پر بریفنگ دی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر صحتڈاکٹریاسمین راشدنے کہاکہ پنجاب کے کسی بھی سرکاری و نجی ہسپتال سے فضلا مارکیٹ میں فروخت نہیں ہوگا۔
پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کوصوبہ بھرکے نجی ہسپتالوں کو سنٹرل پالیسی جاری ہونے کے بعد قوانین کے مطابق فضلا تلف کرنے کی ہدایت کی گئی۔پنجاب کے ہر سرکاری ہسپتال سے فضلا کو تلف کرنے کے مکمل اعداد و شمار اکٹھے کئے جائیں۔ایم ایس حضرات فضلا کو بحفاظت تلف کرنے کے مکمل ذمہ دارہیں۔انہوںنے کہاکہ ہسپتالوں کے فضلا کی مارکیٹ میں فروخت کی مکمل تحقیقات کرکے ذمہ داران کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

تاریخ اشاعت : منگل 27 اگست 2019

Share On Whatsapp