وزیراعظم عمران خان کے سوتیلے بیٹے نے میرے بھائی کو دھمکیاں دیں

ابراہیم مانیکا کی گاڑی ہماری گاڑی کو ٹکر مار رہی تھی جب دھیان سے چلانے کا کہا تو اس نے کہا کیا تم نہیں جانتے میں کون ہوں؟ سوشل میڈیا صارف کی بشریٰ مانیکا کے بیٹے سے متعلق ٹویٹ توجہ کا مرکز بن گئی

لاہور : سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر حیدر کلیم نامی ایک صارف نے ٹویٹ کی ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے سوتیلے بیٹے (ابراہیم مانیکا) نے میرے بھائی کو اس وقت سنگین نتائج کی دھمکیاں دی جب ان کے ڈرائیور کو گاڑی دھیان سے چلانے کا کہا گیا کیونکہ وہ ہماری کار کو ٹکر مار رہا تھا۔ابراہیم مانیکا نے کہا کہ میں ایک وی آئی پی ہوں اور میں جو چاہوں تمہارے ساتھ کر سکتا ہوں۔
کیا تم جانتے ہو میں کون ہوں؟۔
اسی پر سینئیر صحافی فخر درانی نے ٹویٹ کیا ہے کہ سوتیلے باپ کے سر پر راج کرنے والی مخلوق پہلی بار دیکھی ہے۔
صارف نے ایک اور ٹویٹ میں ابراہیم مانیکا کے بھائیوں اور دوستوں کے کمنٹس کے سکرین شاٹس شئیر کرتے ہوئے کہا ہے کہ اب ابراہیم مانیکا اور اس کے بھائیوں کی طرف سے میرے بھائی کو ڈرایا دھمکایا جا رہا ہے۔
صارف حیدر کلیم نے ترجمان پنجاب حکومت شہباز گل اور لاہور پولیس کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ کیا یہ ملک ان لوگوں کے لیے ایک مذاق ہے؟۔ کیا ایسی دھمکیوں کے خلاف ایکشن لینے والا کوئی نہیں؟۔یہاں کوئی احتساب نہیں کیا یہ اصلی وی آئی پی کلچر نہیں؟۔
جب کہ صارف کے ٹویٹ پر دیگر صارفین نے بھی وی آئی پی کلچر کے خلاف نعرے لگانے والی پی ٹی آئی حکومت پر سخت تنقید کی۔
ایک صارف نے کہا کہ پاکستان کبھی نہیں بدلے گا۔ عمران خان کی حکومت پچھلی حکومت کی طرح نااہل ہے۔ یہاں کبھی بھی کچھ نہیں بدلے گا۔جب کہ کچھ صارفین نے اسے محض لوگوں کی توجہ حاصل کرنے کا طریقہ قرار دے دیا۔
ایک اور صارف نے کہا کہ
۔اس کے علاوہ بھی کچھ صارفین نے اسے ایک پبلسٹی سٹنٹ قرار دے دیا جب کہ کچھ صارفین نے پی ٹی آئی کی حکومت پر بھی سخت تنقید کی۔

تاریخ اشاعت : ہفتہ 24 اگست 2019

Share On Whatsapp