مائلی سائرس اور شوہر میں ہم جنس پرستی کے باعث علیحدگی

دونوں کے درمیان علیحدگی کی وجہ مائلی کا امریکی بلاگر کیتھلن کارٹر کے ساتھ افیئر ہے

نیویارک : عالمی شہرت یافتہ امریکی موسیقار مائلی سائرس پر ہمیشہ سے ہم جنس پرست ہونے کا الزام لگایا جاتا رہا ہے جبکہ کچھ ماہ قبل ہی انہوں نے انٹرویو میں خود بھی اس بات کا اعتراف کیا تھا کہ وہ جنسی طور پر خواتین کی جانب زیادہ مائل ہوتی ہیں۔اور اب رپورٹس سامنے آئی ہیں کہ اداکارہ کے ہم جنس پرست رجحانات کی وجہ سے ان کے اور شوہر اداکار لیام ہیمس ورتھ کے درمیان علیحدگی ہوگئی ہے۔
خیال رہے کہ 26 سالہ مائلی سائرس نے دسمبر 2018 میں ہولی وڈ اداکار لیام ہیمس ورتھ سے خفیہ شادی کی تھی تاہم صرف 8 ماہ بعد ہی ان دونوں نے علیحدگی کا اعلان کردیا۔اداکارہ مائلی کے منیجر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے اس خبر کی تصدیق کی۔انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ ان دونوں کو ایسا لگا کہ یہی ان کے لیے بہترین فیصلہ ہوگا، ایسا کرنے سے یہ دونوں خود پر اور اپنے کیریئر پر توجہ دے سکیں گے۔
جہاں دونوں اسٹارز کی باہمی رضامندی سے علیحدگی کی رپورٹس سامنے آرہی تھی، وہیں اب ایسی قیاس آرائیاں بھی کی جارہی ہیں کہ ان دونوں کے درمیان علیحدگی کی وجہ مائلی سائرس کا شادی شدہ ہونے کے باوجود کسی اور سے تعلقات جبکہ لیام ہیمس ورتھ کا منشیات کا استعمال ہے۔ذرائع کے مطابق پہلے یہ خبریں سامنے آئی تھیں کہ اداکارہ نے اپنی شادی شدہ زندگی کو موقع دینے کی کوشش کی تاہم لیام کی نشہ کرنے کی عادت نے انہیں یہ رشتہ ختم کرنے پر مجبور کیا۔تاہم اب اداکار کے قریبی ذرائع نے میڈیا کو بتایا کہ ان دونوں کے درمیان علیحدگی کی وجہ مائلی کا امریکی بلاگر کیتھلن کارٹر کے ساتھ افیئر ہے۔ان دونوں کی چند روز قبل ایک ساتھ تصویر بھی سوشل میڈیا پر خوب وائرل ہوئی تھیں۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 16 اگست 2019

Share On Whatsapp