بھارت کا جمہوری ملک ہونے کا دعوٰی اس کے منہ پر طمانچہ ہے،سابق وفاقی وزیر برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان چوہدری محمد برجیس طاہر

شیخوپورہ : سابق وفاقی وزیر برائے امور کشمیر و گلگت بلتستان چوہدری محمد برجیس طاہر نے کہا ہے کہ کشمیر کے اندر ہندوستان نے نہتے کشمیریوں پر ظلم و ستم کا جو بازار گرم کر رکھا ہے اس سے یہ ثابت ہو گیا ہے کہ بھارت کا جمہوری ملک ہونے کا دعوٰی اس کے منہ پر طمانچہ ہے۔حالیہ 370اور35-Aکشمیر کا سٹیٹس ختم کرنا بھارت کی بوکھلاہٹ اور ناکامی کی ایک بہت بڑی مثال ہے۔
بھارت اپنی ناکامیاں چھپانے کے لئے مختلف اوچھے ہتھکنڈے استعمال کر رہا ہے ۔برجیس طاہر نے کہا کہ بھارت جیسے مرضی گھنائونی سازشیں اور ہتھکنڈے استعمال کر لے کشمیر کی آزادی کو کبھی نہیں دبا سکتا اور وہ وقت دور نہیں جب کشمیریوں کی قربانیاں رنگ لائیں گی اور کشمیر کی آزادی کا سورج طلوع ہونے کی منزل کے قریب ہے۔آزاد کشمیر کی سویلین آبادی پر کلسٹر بموں جیسا مہلک ہتھیار استعمال کرنا عالمی قوانین کی سرا سر خلاف ورزی اور انسانی حقوق کی پامالی ہے۔انہوں نے کہا کہ انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں کی کشمیر کے اندر مظالم اور سویلین آبادی پر مہلک ہتھیاروں کے استعمال پر خاموشی سوالیہ نشان ہی

تاریخ اشاعت : جمعرات 8 اگست 2019

Share On Whatsapp