سعودی عرب میں عید الاضحی کے موقع پر سرکاری ملازمین کی موجیں لگ گئیں

حکومت نے عید الاضحی کے لیے 12 چھُٹیوں کا اعلان کر دیا

ریاض : سعودی عرب میں اس وقت حج کی تیاریاں زور و شور سے جاری ہیں۔ جس کے ساتھ ہی عید الاضحی بھی منائی جائے گی۔ اس حوالے سے سعودی عرب کے سرکاری ملازمین کو ایک ایسی خبر سُنا دی گئی ہے جس سے اُن کے دِل خوشی سے جھُوم اُٹھے ہیں۔ اُردو نیوز کے مطابق وزارت شہری خدمات کی جانب سے ایک اعلامیہ جاری کر کے بتایا گیا ہے کہ اس بار عید الاضحی کے موقع پر 12 روز کی تعطیلات ہوں گی۔
سعودی خبر رساں ادارے ایس پی اے کے مطابق سرکاری دفاتر میں 6 اگست 2019ء (منگل) سے عید الاضحی کی تعطیلات شروع ہوں گی جو 18 اگست 2019ء (اتوار) تک جاری رہیں گی۔ اس سے قبل ڈیوٹی کا آخری دِن 5 اگست (سوموار) کو ہو گا۔ واضح رہے کہ سعودی قوانین کے مطابق اگر عید الفطر یا عید الاضحی کی چھٹی کے درمیان کوئی ورکنگ ڈے آجاتا ہے تو ایسی صورت میں چھٹیاں بڑھ جاتی ہیں۔
جیسے کہ اگر چھُٹیاں مثال کے طور پر اگر چھٹیاں بدھ کو ختم ہو رہی ہوں تو ایسی حالت میں جمعرات کو چھٹی میں شامل کر دیا جاتا ہے اس طرح سرکاری ملازمین کو مزید تین دن مل جاتے ہیں۔ایسے ہی اگرچھٹیاں پیر کو شروع ہو رہی ہوں تو اتوار کو چھٹی میں شامل کر دیا جاتا ہے۔اس طرح شروعات میں تین دن خودکار نظام کے تحت شامل ہو جاتے ہیں۔وزارت شہری خدمات نے چھٹی کی اطلاع ملازمین کی جانب سے وزارت کی ویب سائٹ پر سوالات کی بھرمار کے بعد جاری کی۔سعودی عرب میں دو بڑے تہوار عید الفطر اور عید الاضحی نہایت اہتمام کے ساتھ منائے جاتے ہیں۔ ان دونوں موقعوں پر اکثر تعطیلات کی گنتی ایک ہفتے سے زائد بھی ہو جاتی ہے۔

تاریخ اشاعت : جمعرات 25 جولائی 2019

Share On Whatsapp