میاں اسلم اقبال کا لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کی کارکردگی پر عدم اطمینان ،

, شہر میں صفائی کی ناقص صورتحال پر بھی اظہارنااراضگی , صفائی کے نظام ٹھیکیداری سسٹم بھی خرابی کیوجہ ہے،گلی محلوں سے کوڑا کرکٹ اٹھانے کا بھی کوئی موثر میکانزم موجود نہیں‘وزیر صنعت و تجارت , کمپنی کی کارکردگی و صفائی کے نظام کا جائزہ ،مجوزہ طویل المیعاد سٹرٹیجی پر غورکیا گیا، نئی سٹرٹیجی کے حوالے سے جامع پریذینٹیشن تیار کرنے کی ہدایت

لاہور : وزیراعلی پنجاب کی ہدایت پر صوبائی وزیر صنعت وتجارت میاں اسلم اقبال کی زیر صدارت وزیراعلی آفس میں اجلاس منعقدہوا۔جس میں لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کی کارکردگی اور صفائی کے نظام کا جائزہ لیا گیا۔اجلاس میں پنجاب کے لئے مجوزہ طویل المعیاد سالڈ ویسٹ مینجمنٹ سٹرٹیجی پر بھی غور کیا گیا۔صوبائی وزیر میاں اسلم اقبال نے لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کی کارکردگی پر عدم اطمینان کا اظہارکرتے ہوئے شہر میں صفائی کی ناقص صورتحال پر بھی ناراضگی کا اظہار کیا۔
صوبائی وزیر نے کہا کہ ہر سال اربوں روپے کے وسائل خرچ کرنے کے باوجود صفائی کی صورتحال بہتر نہ ہونا قابل افسوس ہے۔صفائی کے نام پرڈالروں میں ادائیگی سے صفائی کی صورتحال تو بہتر نہیں ہوئی لیکن قومی معیشت پر بوجھ ضرور پڑا ہے۔انہوں نے کہا کہ صفائی کے نظام ٹھیکیداری سسٹم بھی خرابی کی وجہ ہے اورگلی محلوں سے کوڑا کرکٹ اٹھانے کا بھی کوئی موثر میکانزم موجود نہیں۔
صوبائی وزیر نے کہا کہ کفایت شعاری کی پالیسی پر عمل کرتے ہوئے صفائی کے نظام کوبہتر بنانا ہے۔میاں اسلم اقبال نے ہدایت کی کہ صفائی کے موجودہ نظام اور نئی سٹرٹیجی کے حوالے سے جامع پریذینٹیشن تیار کی جائے۔انہوں نے کہا کہ صحت مند ماحول سے صحت مند معاشرہ تشکیل پاتا ہے اس لئے شہروں میں صفائی کی صورتحال میں بہتری لانے کے لئے صفائی کے نظام میں جدت لاناہوگی۔ایم ڈی سالڈ ویسٹ مینجمنٹ نے کمپنی کی کارکردگی اور آئندہ کے لائحہ عمل کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔سیکرٹریزخزانہ، بلدیہ،کمشنر وڈپٹی کمشنر لاہور،چیئرمین ایل ڈبلیو ایم سی اور متعلقہ افسران نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 12 جولائی 2019

Share On Whatsapp