اسرائیلی زندانوں میں 7 فلسطینی قیدیوں کی بھوک ہڑتال جاری

بھوک ہڑتال کی وجہ سے قیدیوں کی خرابی صحت کی خبریں بھی موصول ہوئی ہیں،فلسطینی میڈیا

رام اللہ : اسرائیلی جیلوں میں 7 فلسطینی اسیران نے انتظامی حراست کے خلاف بہ طور احتجاج بھوک ہڑتال جاری رکھی ہوئی ہے۔مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق بھوک ہڑتال کرنے والے 47 سالہ اسلامی جہاد کے رہ نما جعفر عزالدین کی بھوک ہڑتال 27 روز سے جاری ہے۔ بھوک ہڑتال کی وجہ سے ان کی خرابی صحت کی خبریں بھی موصول ہوئی ہیں۔عوامی محاذ کے رہ نما احمد زھران بھوک ہڑتال جاری رکھنے والے دوسرے فلسطینی اسیر ہیں جو مسلسل 20 دن سے بھوک ہڑتال جاری رکھے ہوئے ہیں۔
عزالدین کارہائشی تعلق غرب اردن کے جنوبی شہر الخلیل کے دیر سامت قصبے سے ہے۔غرب اردن کے جنوبی شہر بیت لحم کے الدھیشہ کیمپ کے رہائشی مصطفیٰ الحسنات اور محمد ابو عکر، جب کہ مشرقی بیت المقدس کے ابو دیس کے رہائشی خذیفہ بدر11 دنوںسے بھوک ہڑتال جاری رکھے ہوئے ہیں۔ صہیونی حکام نے ان تینوں کو قید تنہائی میں ڈال دیا ہے۔فلسطینی محکمہ امور اسیران کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ رامون جیل کی انتظامیہ نے بھوک ہڑتال کرنے والے پانچ اسیران کی رہائی کی مدت کا تعین کر دیا ہے۔
انتظامی حراست میں مزید توسیع نہ کرنے کا مطالبہ کرنے والے اسیران میں دو سگے بھائی محمود الفسفوس اور کاید الفسفوس، 26 سالہ غضنفر ابو عطوان کی انتظامی حراست 30 اکتوبرکو ختم ہوگی اور ان کی حراست میں مزید توسیع نہیں کی جائے گی۔ 30 سالہ اسیر عبدالعزیز سویطی کو 14 ستمبر کو رہا کیا جائے گا جب کہ اسیر ساید النمور کو یکم دسمبر 2019ء کو رہا کیا جائے گا۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 12 جولائی 2019

Share On Whatsapp