ٹویٹر پر #نوازشریف_کو_رہا_کرو ٹاپ ٹرینڈ بن گیا

اسلام آبادہائیکورٹ کے فیصلے کے بعد نواز شریف کو جیل میں قید رکھنا غیر قانونی ہے۔ صارفین کے ٹویٹ

لاہور : : اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کو عہدے سے ہٹائے جانے کے فیصلے کے بعد ٹویٹر پر #نوازشریف_کو_رہا_کرو ٹاپ ٹرینڈ بن گیا۔سوشل میڈیا پر بڑی تعداد میں صارفین نے نواز شریف کو رہا کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ایک صارف نے کہا ہے کہ ہمیں نواز شریف کی ضرورت ہے۔نواز شریف کو رہا کیا جائے۔
ایک صارف نے کہا ہے کہ یہ وقت کھڑے ہونے کا ہے۔
یہ وقت اپنے حقوق کے لیے لڑنے کا ہے اس لیے نواز شریف کو رہا کیا جائے
ایک صارف نے کہا کہ اب نواز شریف کو جیل کے اندر قید کرنے کا کوئی جواز نہیں بنتا وہ معصوم ثابت ہو چکے ہیں۔
ایک صارف نے فوری طور پر نواز شریف کو رہا کرنے کا مطالبہ کیا ہے
ایک صارف نے کہا کہ نواز شریف کی حراست اب غیر قانونی ہیں،قوم ان کی رہائی کا مطالبہ کرتی ہے۔
جب کہ اس معاملے پر ن لیگ کا بھی ردِعمل سامنے آیا ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ جج کو ہٹانے کے بعد نواز شریف کے خلاف فیصلے کی قانونی حیثیت بھی ختم ہو گئی.ان کا کہنا تھا کہ ثابت ہو گیا مریم نواز جو حقائق سامنے لائیں وہ درست ہیں۔
تصدیق ہو گئی کے جج ارشد ملک کی ویڈیو اصلی ہے۔ مریم اورنگزیب نے کہا اب نواز شریف کے خلاف فیصلے کو بھی کالعدم قرار دے دیا جائے اور انہیں فوری رہا کیا جائے۔جب کہ مریم نواز شریف نے کہا ہے کہ  اللہ کا شکر! لیکن معاملہ کسی جج کو معطل کیے جانے کا نہیں۔ معاملہ اس فیصلے کو معطل کرنے کا ہے جو اس جج نے دیا، معاملہ کسی جج کو عہدے سے ہٹانے کا نہیں۔ معاملہ اس فیصلے کو عدالتی ریکارڈ سے نکالنے کا ہے جو جج نے دباؤ میں دیا۔معاملہ کسی کو جج کو ہٹانے کا نہیں بلکہ اس فیصلے کو فارغ کرنے کا ہے۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 12 جولائی 2019

Share On Whatsapp