تحریک انصاف کی جانب سے بھی جوابی کارروائی، سینیٹ میں تحریک عدم اعتماد جمع کرا دی

یہ تحریک عدم اعتماد پیپلز پارٹی کے حمایت یافتہ موجودہ ڈپٹی چیئرمین سلیم مانڈوی کے خلاف جمع کروائی گئی ہے

اسلام آباد : ایک طرف متحدہ اپوزیشن کی جانب سے تحریک انصاف کے حمایتی سینیٹ کے چیئرمین صادق سنجرانی کو ہٹانے کے لیے تیاریاں زور پکڑ گئی ہیں تو دُوسری جانب تحریک انصاف نے بھی جوابی کارروائی کرتے ہوئے سینیٹ کے ڈپٹی چیئرمین سلیم مانڈوی والا کے خلاف تحریک عدم اعتماد جمع کرا دی ہے۔ سلیم مانڈوی والا پاکستان پیپلز پارٹی کی حمایت سے سینیٹ کے ڈپٹی چیئرمین بننے میں کامیاب ہوئے تھے۔
سلیم مانڈوی والا کے خلاف عدم اعتماد کی یہ تحریک پاکستان تحریک انصاف اور اس کی اتحادی جماعتوں کی جانب سے جمع کروائی گئی ہے جس پر 26 سینیٹرز کے دستخط موجود ہیں۔ اس حوالے سے سلیم مانڈوی والا نے میڈیا ذرائع کو بتایا کہ میرے خلاف تحریک عدم اعتماد کی تیاریاں ہو رہی ہیں۔ مگر میں اس معاملے پر پریشان ہونے والا بالکل نہیں۔ اب یہ اپوزیشن کو خیال کرنا چاہیے کہ کہیں یہ عہدہ بھی اُن کے ہاتھ سے نہ نکل جائے۔
واضح رہے کہ سلیم مانڈوی والا کا تعلق کراچی کے ایک اہم کاروباری گھرانے سے ہے۔ وہ 12 مارچ 2018ء کو سینیٹ کے ڈپٹی چیئرمین چُنے گئے تھے۔ انہوں نے اپنے مخالف اُمیدوار عثمان خان کاکڑ کے 44 ووٹوں کے مقابلے میں 54 ووٹ حاصل کر کے یہ عہدہ حاصل کیا تھا۔ سلیم مانڈوی والا ریئل اسٹیٹ کے کاروبار سے وابستہ ہیں۔ جبکہ اُن کے خاندان کے دیگر افراد آٹو موبائلز، میڈیا اور دیگر مصنوعات کی تیاری سے جُڑی صنعتوں سے منسلک ہیں۔ سلیم مانڈوی سیاسی طور پر پاکستان پیپلز پارٹی سے جُڑے ہیں اور آصف علی زرداری کی حمایت سے ہی سینیٹ میں اہم عہدہ حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 12 جولائی 2019

Share On Whatsapp