حسین نواز نے عمرے کے دوران 25 اور پھر 50کروڑ کی آفر کی

حسین نواز نے مجھے کہا کہ ہمارے ساتھ تعاون کریں آپکو بیرون ملک سیٹ کروا دیں گے۔ ارشد ملک کا انکشاف

اسلام آباد : : احتساب عدالت کے جج ارشد ملک نے اپنے بیان حلفی میں اہم انکشافات کر دئیے ہیں۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ارشد ملک نے بیان حلفی میں کہا ہے کہ مجھے سماعت کے دوران بھی ن لیگ کی جانب سے دھمکایا گیا اور فیصلے کے بعد بھی دھمکایا گیا جس کا ذکر میں نے اپنی فیملی سے بھی کیا۔ ارشد ملک نے مزید کہا کہ جب میں عمرہ ادا کرنے گیا تو وہاں پہلے سے ان کے لوگ موجود تھے،عمرے کے دوران میریحسین نواز سے ملاقات کروائی گئی۔
حسین نواز نے مجھ سے کہا کہ ہمارے ساتھ تعاون کریں آپکو بیرون ملک سیٹ کروا دیں گے۔انہوں نے کہا کہ آپکو یہاں یا کسی اور ملک میں سیٹ کروا دیں گے۔سعودی عرب میں حسین نواز نے 25 اور پھر 50کروڑ کی آفر کی۔حسین نواز نے کہا کہ اب آپ کو سعودی عرب سے پاکستان جانے کی ضرورت نہیں۔انہوں نے کہا کہ اگر آپ نے کسی اور ملک جانا ہے تو آپکو دستاویزات بنا دیں گے۔
جاتی امراء میں نواز شریف نے ہر طرح کی آفرز کی اور تعاون مانگا۔جب نواز شریف سے رائیونڈ میں ملاقات کروائی گئی تو انہوں نے کہا کہ ہمارے ساتھ تعاون کریں آپکو مالا مال کر دیں گے۔خیال رہے آج اسلام آباد ہائیکورٹ نے احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کو عہدے سے ہٹانے کے لیے وزارت قانون و انصاف کو خط لکھا ہے جس پر ن لیگ کا بھی ردِعمل سامنے آیا۔پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کا کہنا ہے کہ جج کو ہٹانے کے بعد نواز شریف کے خلاف فیصلہ کی قانونی حیثیت بھی ختم ہو گئی.ان کا کہنا تھا کہ ثابت ہو گیا مریم نواز جو حقائق سامنے لائیں وہ درست ہیں۔
تصدیق ہو گئی کے جج ارشد ملک کی ویڈیو اصلی ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا اب نواز شریفکے خلاف فیصلے کو بھی کالعدم قرار دے دیا جائے اور انہیں فوری رہا کیا جائے۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 12 جولائی 2019

Share On Whatsapp