معروف صحافی نے وزیر اعظم عمران خان کو اہم معاملے پر مشورہ دے ڈالا

روٴف کلاسرا نے کہا کہ اپوزیشن کا چیئرمین سینیٹ آنا عمران خان کی کارکردگی میں اضافے کا باعث بنے گا

اسلام آباد : معروف صحافی و تجزیہ کار روٴف کلاسرا نے وزیر اعظم عمران خان کو مشورہ دیا ہے کہ وہ چیئرمین سینیٹ کے معاملے سے اپنے آپ کو الگ تھلگ ہی رکھیں۔ کیونکہ اپوزیشن کا چیئرمین سینیٹ آ جانے سے کوئی آسمان نہیں گِر پڑے گا۔ بلکہ یہ عمران خان کے لیے اچھا شگون ہو گا۔ کیونکہ آپ کو اچھی اپوزیشن مِلنی چاہیے۔ آپ کا دُشمن آپ کا مخالف ہی آپ کو اچھی زندگی گزارنے پر مجبور کرتے ہیں۔
جتنے طاقتور آپ کے دُشمن ہوتے ہیں اُتنا ہی اچھا آپ پرفارم کرتے ہیں۔ ڈسپلن میں رہتے ہیں، غلطیاں کم کرتے ہیں۔ اگر یہ کہیں کہ سڑکیں سُنسان ہو جائیں اور بیچ میں مرزا یار پھِرے۔ تو اس کے بعد مرزے کے ساتھ جو کچھ ہوتا ہے۔ صاحباں تیر توڑ دیتی ہے۔قومی اسملبی میں اپوزیشن کی پوزیشن نہ ہونے کے برابر رہ گئی ہے۔ زیادہ تر جو لوگ ہیں وہ جیل میں ہیں، یا اُن پر مقدمے ہیں یا کمزور ہیں۔
سو عمران خان کا قومی اسمبلی میں وقت بہت آسان جا رہا ہے۔ صرف ایک سینیٹ آف پاکستان بچی ہے جہاں اپوزیشن کا کوئی بڑا لیڈر جیل میں نہیں ہے۔ اگر چیئرمین سینیٹ کے خلاف اپوزیشن کی تحریک عدم اعتماد ناکام ہو گئی تو یہی باتیں گردش میں آئیں گی کہ حکومت کی جانب سے سینیٹ کے ارکان کو لالچ دے کر خریدا گیا ہے یا کوئی ڈیل کی گئی ہے۔ عمران خان صاحب اتنا بڑا دھبہ اپنے اُوپر نہ لے کر جائیں۔
عمران خان کو چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی سے ملاقات بھی نہیں کرنی چاہیے تھے۔ کیونکہ عمران خان اُن سے ملاقات کر کے یہ پیغام دے رہے ہیں کہ میں ان کے ساتھ کھڑا ہوں۔ یہ وہی سینیٹ کے چیئرمین ہیں جن سے عمران خان اُس وقت شدید ناراض ہو گئے تھے جب انہوں نے فواد چودھری صاحب پر سینیٹ میں پابندی لگائی تھی۔

تاریخ اشاعت : جمعہ 12 جولائی 2019

Share On Whatsapp