Inzamam Ul Haq Destroyed Pakistan Cricket

انضمام الحق کی انگلینڈ میں موجودگی نے ٹیم کا تیا پانچہ کردیا

چیف سلیکٹر نے بعض مخصوص کھلاڑیوں کی شمولیت کیلئے اپنے اختیارات کا ناجائزفائدہ اٹھایا

لندن : چیف سلیکٹر انضمام الحق کی انگلینڈ میں موجودگی ٹیم کیلئے تباہ کن ثابت ہوئی۔چیف سلیکٹر انضمام الحق کی زیر سربراہی قائم سلیکشن کمیٹی کی تین سالہ مدت مکمل ہو چکی، اسے ورلڈکپ سکواڈ منتخب کرنے کا اضافی ٹاسک دیا گیا تھا، میگا ایونٹ سے قبل انھوں نے بورڈ حکام کے سامنے اس خواہش کا اظہار کیا کہ قومی ٹیم کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے لیے انگلینڈ جانا چاہتے ہیں، یہ بھی کہا کہ اس دوران بیٹسمینوں کی رہنمائی بھی کریں گے۔
انضمام کو پی سی بی نے بزنس کلاس کا فضائی ٹکٹ دےکر بھیجا اور 500 ڈالر ڈیلی الاﺅنس دیا گیاجس پر بورڈ کی اچھی خاصی رقم خرچ ہو گئی۔عموماً 15 کھلاڑیوں کا انتخاب کرنے کے بعد سلیکشن کمیٹی کا کام ختم ہو جاتا ہے مگر حیران کن طور پر ورلڈکپ جیسے اہم ایونٹ میں ایسا نہیں ہوا،ذرائع نے بتایاکہ انگلینڈ جانے کے بعد سابق کپتان نے ٹیم مینجمنٹ کے کام میں مداخلت شروع کردی، انضمام کو کپتان سرفراز احمد اور کوچ مکی آرتھر کے ساتھ ٹور سلیکشن کمیٹی میں بھی شامل کر لیا گیا اور یوں پلیئنگ الیون کے انتخاب میں ان کی رائے بھی شامل رہی، اس دوران انھوں نے بعض مخصوص کھلاڑیوں کی شمولیت کیلیے اپنے اختیارات کا ناجائزفائدہ اٹھایا،ٹیم مینجمنٹ انضمام الحق سے خوش نہ تھی، سونے پر سہاگہ وہ قومی ٹیم کے ٹریننگ سیشنزمیں جاکرکھلاڑیوں کو’مفید مشوروں‘ سے نوازنے لگے، کوچز کی بھاری بھرکم فوج نے اسے اپنے کام میں مداخلت تصور کیا۔
ذرائع نے بتایا کہ ورلڈکپ میں ٹیم کا تیاپانچہ ہونے کے بعد اب چیف سلیکٹر اپنے رشتہ داروں کے پاس چلے گئے ہیں اور بقیہ میچز میں کھلاڑیوں کو ان کی ”خدمات“ حاصل نہیں ہوں گی۔

تاریخ اشاعت : منگل 18 جون 2019

Share On Whatsapp